Exemplary Patient Experiences, Always.

 

Exemplary Patient Experiences, Always.

ایم آر آئی کے مریض ضرور پڑھیں

مندرجہ ذیل معلومات "ہالٹن ہیلتھ کیئر" کے اُن مریضوں کے لئے ہیں جو ایم آر آئی ) مقناطیسی  ریزونینس  امیجنگ( سکین  نامی ٹیسٹ کروانے والے ہیں۔

ایم آر آئی  کا سکینر انسانی جسم، خاص طور پر نرم بافتوں ،جیسا کہ دماغ، ریڑھ کی ہڈی اور پٹھوں وغیرہ کی انتہائی شاندار تفصیلی تصاویر کے حصول کے لئے، ایک طاقتور مقناطیس اور ریڈیو لہروں کا اِستعمال کرتا ہے۔ ایم آر آئی ہر گز بھی ایکس رے / تابکاری شعائیں اِستعمال نہیں کرتا۔ پشت کے بل بے حِس و حرکت لیٹنے سے ہونے والی تھوڑی سی بے آرامی کے علاوہ ایم آر آئی، عموما"  بیس سے ساٹھ منٹ کے دورانیہ کا ایک ایسا عمل ہے جِس میں درد  بالکل نہیں ہوتا۔

ایک طاقتور مقناطیسی میدان، جیسا کہ ایم آر آئی میں اِستعمال ہوتا ہے، کچھ مریضوں میں قابلِ ذکر اثرات  پیدا کر سکتا ہے۔ باایں ہمہ، آپ کے ہر دورے  پرآپکی ایم آر آئی کی سکریننگ جانچی جائے گی۔ براہِ کرم کوئی سوال سمجھ میں  نہ آنے کی صورت میں تکنیکی ماہر سے وضاحت طلب کریں۔

کچھ معائنہ جات کے لئے خاص رنگ )کنٹراسٹ( یا ڈائی کا ٹیکہ لگایا جاتا ہے، اِس   سلسلہ میں اِستعمال ہونے والے مخصوص  کنٹراسٹ  کو گیڈو وسٹ یا عمومی نام گیڈولینیم سے جانا جاتا ہے۔

گیڈولینیم کے ٹیکے کئی قسم کی ایم آر آئی تحقیقات میں لگائے جاتے ہیں تا کہ ریڈیالوجسٹ )ماہرینِ ایم آر آئی( مخصوص جگہوں جیسے دماغ، شریانوں، گردے، جگر اور دیگر اعضاء کی بہترین  تشخیص کر سکیں۔

اگر آپ ماہرِ امراضِ گردہ ) نیفرالوجسٹ( کے پاس جاتے ہیں یا ماضی میں گردہ کی بیماریوں کا شکار یا ڈایا لیسیز پر رہے ہیں تو براہِ کرم عملے کہ مطلع کیجئے، کیونکہ یہ بیماریاں آپ کو کنٹراسٹ ڈائی کا ٹیکہ لگائے جانے یا نہ لگائے جانے کے فیصلہ پر اثر انداز ہو سکتی ہیں۔ اگر آپ کو ماضی میں کنٹراسٹ کے ٹیکہ سے کسی قسم کے مسائل کا سامنا کرنا پڑا ہو یا  ادویات و کھانوں کی الرجی، دمہ یا   حے فیور) تپ کاہی  -  یعنی چھینکوں سے آنکھ اور ناک کی سرخی اور پانی آنا( کا شکار رہے ہوں تو براہِ کرم ہمیں مطلع کریں۔

ڈائی لگانے کے لئے آئی وی )وریدوں میں داخل کی جانے والی( سوئی آپ کے ہاتھ یا بازو میں لگائی جائے گی۔

بہت سے لوگ ڈائی کے نتیجہ میں کسی قسم کی پیچیدگی کا  شکار نہیں ہوتے۔اگر ری ایکشن )ردِّعمل( ہو بھی جائے تو بہت معمولی ہوتا ہے جس میں متلی ہونا، قے آنا، خارش یا ددریہ )ہائیوز(  شامل ہیں ، یہ علامات عموما"   خودبخود بغیر علاج کے یا اگرضرورت پڑے تو دوا کے اِستعمال سے فوری غائب ہو جاتی ہیں ۔

ذیادہ خطرناک ری ایکشن کا تناسُب ایک لاکھ میں سے ایک ہے، جس میں خون کے دباو )بلڈ پریشر(  کا گر جانا اوردِل کی دھڑکن کا بے ترتیب ہو جانا شامل ہیں۔ اِن میں سے  کسی بھی قسم کی پیچیدگی ہونے کی صورت میں، حسبِ ضرورت علاج مہیّا کیا جائے گا۔

آپ کے کیس پر مامور طبّی عملہ، مندرجہ بالا خطرات اور مُمکنہ پیچیدگیوں سے آگاہ ہے۔ اُن کی رائے کے مُطابق ڈائی کے ٹیکہ کے نتیجہ میں حاصل ہونے والے نتائج آپ کے مرض کی تشخیص میں سُودمند ثابِت ہونگے۔

اگر کنٹراسٹ کے طبّی معائنہ سے متعلق آپ کے کُچھ ایسے سوالات ہوں جن کے جوابات عملہ یا نرس نے نہ دیئے ہوں تو ریڈیالوجسٹ مزید وضاحت فراہم کر سکتا ہے۔ تکنیکی ماہرین آپ کو تصاویر دکھانے یا آپ کے نتائج سے متعلق کوئی معلومات مہیّا نہیں کر سکتے۔ اِس سلسلہ میں آپ کو اپنے خاندانی معالج )فیملی ڈاکٹر( سے رابطہ قائم کرنا پڑے گا۔

کام سے متعلق ہمارا مثبت عملی نظریہ، عملہ سے متعلق کسی بھی قسم کی بد کلامی یا عملہ کے خلاف بدصورت روّیہ برداشت نہیں کرتا۔ ہم آپ کے تعاون کے شکر روّیہ برداشت نہیں کرتا۔ ہم آپ کے تعاون کے شکر گزار ہیں اور ہمیں اپنے علاج کا حصّہ بنانے پر آپ کا شکریہ ادا 
کرتے ہیں۔

Uncommon content coming soon.